ٹک ٹاک ہائی الرٹ پر

ٹک ٹاک

کوالالمپور : ویڈیو شیئرنگ ایپلی کیشن ٹک ٹاک نے تمام صارفین کو متنبہ کیا ہے کہ اصولوں کی خلاف ورزی کرنے والوں کیخلاف فوری کارروائی کی جائے گی۔

ٹک ٹاک انتظامیہ کی جانب سے جاری ایک بیان میں ترجمان نے کہا ہے کہ وہ ایسے مواد کے لیے ہائی الرٹ پر ہیں جس کی وجہ سے ملائیشیا میں ہونے والے انتخابات پر منفی اثر پڑا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق ترجمان نے واضح کیا کہ ملائیشیا میں ٹک ٹاک پر اپلوڈ کے گئے کسی بھی خلاف ورزی پر مبنی مواد کو فوری طور پر ہٹا دیا جائے گا۔

ٹک ٹاک ایپ جو چین میں قائم فرم ’بائٹڈنس‘ کی ملکیت ہے نے ایک بیان میں کہا ہے کہ وہ ملائشیا میں ہونے والے انتخابات کے آغاز سے ہی سوشل میڈیا پر ہونے والی خلاف ورزیوں کے حوالے سے ملائیشیا حکام کے ساتھ مسلسل رابطے میں ہے۔

سوشل میڈیا صارفین نے انتخابات کے بعد سے ایسی لاتعداد ٹک ٹاک پوسٹس پر انتظامیہ کو رپورٹ کیا کہ جس میں 13 مئی 1969 کو دارالحکومت کوالالمپور میں ہونے والے ہنگامے کا ذکر کیا گیا تھا، جس میں تقریباً 2سو افراد ہلاک ہوئے تھے۔

ٹک ٹاک ترجمان نے کہا کہ انتظامیہ نے 13 مئی سے متعلقہ مواد کے ساتھ ساتھ ان ویڈیوز کو بھی ہٹا دیا ہے جو اس کے قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہیں، انہوں نے کہا کہ ادارے میں نفرت انگیز مواد اور پرتشدد انتہا پسندی کے لیے "زیرو ٹالرنس” ہے۔

ترجمان نے رائٹرز کو بتایا کہ وہ 13 سال سے کم عمر کے صارفین کے ذریعے چلنے والے کسی بھی اکاؤنٹ کو ہٹا دے گا جب کچھ والدین نے شکایت کی کہ ان کے بچوں کو توہین آمیز مواد کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

مزید پڑھیں : ٹک ٹاک نے لاکھوں پاکستانی ویڈیوز ہٹا دیں

یاد رہے کہ رواں سال اکتوبر میں ٹک ٹاک کی کمیونٹی گائیڈ لائن کی خلاف ورزی کرنے پر پلیٹ فارم نے پاکستانی صارفین کی ایک کروڑ 53 لاکھ 51 ہزار 388 ویڈیوز کو ہٹا دیا تھا۔

رپورٹ کے مطابق سال2022 کی دوسری سہ ماہی میں کمیونٹی گائیڈ لائنز کی خلاف ورزی کرنے پر عالمی سطح پر 11 کروڑ 3 لاکھ 51 ہزار 388 ویڈیوز ہٹائی گئی تھیں، یہ تعداد ٹک ٹاک میں اپلوڈ کی گئی تمام ویڈیوز کا ایک فیصد ہے۔



from ARYNews.tv | Urdu – Har Lamha Bakhabar https://ift.tt/s4W9UNw ویب ڈیسک

0 Comments:

Post a Comment